دنیا کے نامور ریسلنگ اسٹارز 2020 میں پاکستان آئینگے:پیر سیّد عاصم علی کاظمی

دنیا کے نامور ریسلنگ اسٹارز میں پاکستان آئینگے،پیر سیّد عاصم کاظمی نے بتایا اب پاکستان کے بعد وہ بین الاقوامی شرکت یافتہ تنظیموں کے اشتراک سے جرمنی،آسٹریا،فرانس میں انٹرنیشنل دنگل کروانے کا ارداہ رکھتے ہیں

فرینکفرٹ: رنگ آف پاکستان کے چیرمین پیر سیّد عاصم کاظمی ان د نوں یورپ کے دورے پر ہیں آسٹریا کے بعد فرینکفرٹ جرمنی میں ان کے اعزاز میں پُرتکلف ڈنر کا اہتمام رسلر فلامے ریسٹورنٹ میں کیا گیا،جس میں آسٹریا کے معروف بزنس میں محفوظ اللہ اور عرفان شاہد لندن سے رنگ آف پاکستان مینجنگ ڈائیریکٹر عمران حسین شاہ کے علاوہ فرینکفرٹ اور گردونواح میں مقیم معززین نے شرکت کی۔پروگرام کا آغازمعروف شاعر سیّد اقبال حیدر نے کرتے ہوئے آسٹریا سے آئے مہمان عرفان شاہد کو نظامت کی دعوت دی،عرفان شاہد نے رنگ آف پاکستان کا مختصر تعارف کرایا،ریسٹورنٹ کے منتظمین نے بڑی سکرین پر رنگ آف پاکستان کے زیرِ انتظام پاکستان میں ہونے والے پروگرامز کی جھلکیاں دکھائیں۔

مینجنگ ڈائیریکٹر عمران حسین شاہ نے تقریب میں شرکاء کو بتایا کہ پچھلے دو برسوں پاکستان میں ہونے والی ریسلنگ نے دنیا بھر میں مثبت تاثر قائم کیا ہے آج رنگ آف پاکستان کی دعوت پر امریکہ اور دنیا بھر سے نامور اسٹارز پاکستان آنے کے لئے تیا رہیں۔رنگ آف پاکستان کے چیرمین پیر سیّد عاصم کاظمی نے کہا کہ چند برس پہلے پاکستان میں اسپورٹس کی سرگرمیاں نہ ہونے کے برابر تھیں،

دہشت گردوں کے خوف سے بیرونی دنیا کے کھلاڑی اور اسٹارز پاکستان آنے سے خوف زدہ تھے،ایسے حالات میں انھیں ریسلنگ کے انٹرنیشنل دنگل کرانے کا خیال آیا،ابتدا میں کچھ اداروں نے روائیتی انداز میں مشکلات کھڑی کیں مگرپاک فوج نے بھرپور تعاون سے ان کے اس پروگرام کو کامیابی کی منازل تک پہنچایا۔ رنگ آف پاکستان کی انتظامیہ نے اپنی انتھک کوششوں سے پاکستان میں ریسلنگ کو متعارف کیا اور آئیندہ

برس
دنیا کے نامور ریسلنگ اسٹارز 2020 میں پاکستان آئینگے،پیر سیّد عاصم کاظمی نے بتایا اب پاکستان کے بعد وہ بین الاقوامی شرکت یافتہ تنظیموں کے اشتراک سے جرمنی،آسٹریا،فرانس میں انٹرنیشنل دنگل کروانے کا ارداہ رکھتے ہیں اور ان کا یہ دورہ اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔تقریب کے مہمان خصوصی کونسلیٹ جنرل آف پاکستان شعیب منصور نے پیر سیّد عاصم کاظمی کو جرمنی میں خوش آمدید کہتے ہوئے کہا رنگ آف پاکستان نے انٹرنیشنل ریسلنگ کی پاکستان میں بنیاد رکھ کر پاکستان کے امن پسند تاثر کو اجاگر کیا ہے انھوں نے پیر صاحب کی یورپ میں کامیابی کے لئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا،پُرتکلف ڈنر کے بعد پٹیالہ میوزک اکیڈمی ہیمبرگ کے روح رواں استاد شبیر خان گلو نے طبلہ نوشاد قہوا اورت اپنی جرمنی خواتین شاگردمریانا کیفر اور مادام سٹیفی کے ساتھ محفل کو میوزک سے گرمایا،صوفی کلام اور دھمال نے تقریب کو چارچاند لگا دیئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں